Khawateen Ki Tayariyan

Khawateen Ki Tayariyan
Khawateen Ki Tayariyan

عیدالفطر ہو یا عید الاضحیٰ خواتین شاپنگ اور سجنے سنورنے کا کوئی موقع ہاتھ سے جانے نہیں دیتیں۔ اب چونکہ عید کا موقع ہے یقیناً خواتین بننا سنوارنا پسند کریں گی اور عید کی مناسبت سے بننا سنوارنا عید کی تیاریوں میں ایک اہم حصہ ہے۔ جہاں تک بات چہرے کی حفاظت کی ہے تو اس کا خاص خیال رکھا جانا چاہیے صرف عید کے موقع پر ہی نہیں بلکہ اس کی تیاری بہت دن پہلے شروع کر دینی چاہئے اور اس سلسلے میں پھل سبزیوں اور سلاد کا زیادہ سے زیادہ استعمال کرنا چاہیے جو کہ چہرے کو پرنور، اور نرم و ملائم بنا دیتا ہے۔
سلاد نہ صرف خون کو صاف کرتا ہے بلکہ اس سے چہرے پر چمک آ جاتی ہے۔ پانی کا زیادہ سے زیادہ استعمال بھی چہرے کو رونق بخشتا ہے اور اس سے چہرے کے داغ دھبے اور دانے بھی صاف ہو جاتے ہیں۔
سبزیوں اور پھلوں کی مدد سے جلد کو قدرتی طور پر مسائل سے نجات ملتی ہے اور جلد خوبصورت اور جوان نظر آتی ہے۔
چہرے کے ساتھ ساتھ ہاتھ اور پاؤں کا بھی خاص خیال رکھا جانا چاہئے اور جہاں ذکر ہاتھ اور پاؤں کو سنوارنے کا ہو وہاں مہندی کا ذکر نہ کرنا زیادتی ہے عید پر مہندی کی اہمیت مزید بڑھ جاتی ہے۔
خواتین کے لئے بناؤ سنگھار، عید کی خوشیاں اور ہاتھوں میں مہندی کے دیدہ زیب ڈیزائن بنوائے بغیر ادھوری ہے یوں تو خواتین مہندی لگانا اور لگوایا پسند کرتی ہیں۔ مگر پچھلے کچھ سالوں سے خواتین بیوٹی پارلر سے مہندی لگوانے کو ترجیح دیتی ہیں عید سے چند ہفتے پہلے بکنگ کروالی جاتی ہے اور گلی محلے میں بھی بیوٹی پارلر والیوں کا کاروبار چمک اٹھتا ہے۔
اور اس سلسلے میں ماہر بیوٹیشن کی خدمات لی جاتی ہیں۔ عید پر زیادہ تر خواتین سوڈانی، انڈین، راجستھانی، عربین ڈیزائن کی مہندی لگواتی ہیں کم عمر بچیاں اور لڑکیاں ہاتھوں سے کہنیوں تک ڈیزائن بنواتی ہیں شادی شدہ خواتین انڈین ڈیزائن بنوانے کو ترجیح دیتی ہیں اور دونوں ہاتھوں پر مہندی لگانے کی اجرت 500 سے 800 روپے تک ہوتی ہے۔ مہندی کا رنگ گہرا چڑھے اس کے لئے خواتین کو چاہیے کہ لیموں کو مہندی سوکھنے کے بعد ہاتھوں میں لگا کر ایک گھنٹے کے لئے چھوڑ دیں لیموں کی جگہ سرسوں کے تیل کا بھی استعمال کیا جا سکتا ہے اسی طرح سانوی رنگت والی خواتین مہندی کی آؤٹ لائن گہری بنوائیں اس سے مہندی کی ڈیزائن اور رنگت میں نکھار آ جاتا ہے۔

Eid ul Fitr or Eid ul Adha women do not miss any opportunity to shop and decorate. Now, because Eid is an opportunity, of course, women would love to be celebrated, and being fit for Eid is an important part of Eid preparations. As far as the safety of the face is concerned, this should be taken not only on the occasion of Eid, but also on the preparation of the day long, and the maximum use of fruits and vegetables in this regard should be made. That makes the face bright, soft and supple.
The salad not only cleanses the blood, it also gives a glow to the face. Excessive use of water also irritates the face and it also cleanses facial scars and rashes.
Vegetables and fruits help the skin get rid of problems naturally and make the skin look beautiful and youthful.
Special care should be taken on the face as well as on the face and where it is important to trim the Zikr hands and feet, not to mention Mehndi is excessive.
The make-up of women is incomplete without the elegance of Eid, the joy of Eid and the exquisite embellishment of henna in their hands. But for the past few years, women prefer to get henna from beauty parlor, booking is done a few weeks before Eid and the business of beauty parlor shines in the street.
And in this regard, specialist beautician services are hired. On Eid, most women apply henna to Sudanese, Indian, Rajasthani, Arabian designs. Minor girls and girls make designs with their hands. Married women prefer Indian designs. Up to Rs. The color of the henna deepens so that women should keep the lemons in their hands after drying the henna for one hour, instead of lemons, mustard oil can also be used in the same way. Make the line darker It adds to the mehndi design and color.

Leave a Comment